تازہ ترین

بنگال میں صدر راج نافذکرنے پر غور و خوض ممکن:بی جے پی

11 جون 2019 (00 : 01 AM)   
(      )

نئی دہلی//بھارتیہ جنتا پارٹی(بی جے پی) نے مغربی بنگال میں پارٹی کے پانچ کارکنوں کے قتل کے بعد آج مطالبہ کیا کہ مرکزی حکومت ریاست کے حالات کا جائزہ لینے کے لئے مرکزی ٹیم بھیجے اور صدر راج نافذ کرنے کے سلسلے میں غور کرے ۔مغربی بنگال کے گورنر کیسری ناتھ ترپاٹھی کے وزیر اعظم نریندر مودی اور وزیر داخلہ امت شاہ سے ملاقات کے بعد بی جے پی میں اس ریاست کے انچارج جنرل سکریٹری کیلاش وجیہ ورگیہ نے یہ اشارے دئے ۔انہوں نے نامہ نگاروں سے کہا کہ نظریاتی طورپر ہم اس بات کے حامی ہیں کہ منتخب حکومت کو اپنی مدت کار مکمل کرنے دینا چاہئے ۔ ریاست کے لوگوں کے جان و مال کی حفاظت ریاستی حکومت کی ذمہ داری ہوتی ہے لیکن جس طرح سے وزیر اعلی ممتا بنرجی قسم کھاکر مخالفین کو مٹادینے کی بات کہہ رہی ہیں، خواہ لاقانونیت ہی پھیل جائے ’ ایسے میں ریاست میں صد ر راج نافذ کرنے کے بارے میں غو ر کیا جانا چاہئے ۔انہوں نے کہا کہ مرکزی حکومت کو مغربی بنگال کے حالات کا جائزہ لینے کے لئے مرکزی ٹیم بھیجنا چاہئے ۔ وہاں کے حالات بے حد خراب ہوچکے ہیں۔ انتخابات گذر چکے ہیں لیکن سیاسی تشدد رکنے کا نام نہیں لے رہا ہے اور وزیر اعلی نہایت قابل اعتراض اور اشتعال انگیز بیانات دے رہی ہیںمغربی بنگال میں حکمراں ترنمول کانگریس اور بی جے پی کے درمیان مسلسل بڑھتی ہوئی کشیدگی کے درمیان بی جے پی نے اپنے کارکنوں کی موت کے خلاف پیر کو شمالی چوبیس پرگنہ ضلع کے بشیر ہاٹ میں بار ہ گھنٹے کا بند رکھا جس سے معمولات زندگی بری طرح متاثر ہوئی۔ بند کے دوران دکانیں بند رہیں۔ سڑکیں ویران نظر آئیں اور بند حامیوں نے ریل کی پٹریوں پر کھڑے ہوکر سیالدہ کو جوڑنے والی ریل خدمات کو روک دیا۔دریں اثنا گورنر کیسری ناتھ ترپاٹھی کی آج وزیر اعظم اور وزیرداخلہ سے ملاقات کو سیاسی حلقوں میں کافی اہم سمجھا جارہا ہے ۔ مسٹر ترپاٹھی نے بعد میں نامہ نگاروں سے کہا [؟]میں نے مسٹر مودی سے اخلاقی ملاقات کے لئے وقت مانگا تھا۔ حلف برداری کے دن میں مسٹر مودی سے ذاتی طورپر ملاقات کرکے ان کو مبارک باد نہیں دے پایا تھا۔ آج وزیر اعظم نے ملاقات کے لئے وقت دیا تو میں ان سے ملنے گیا۔مسٹر ترپاٹھی نے مسٹر مودی کو ریاست میں قانون و انتظام کی صورت حال کے بارے میں بتایا۔انہوں نے وزیر داخلہ کو بھی پوری صورت حال سے آگاہ کیا۔یو این آئی