تازہ ترین

ووٹران وکاس دیکھ سکتے ہیںجب کہ د وسروں کو نظر نہیں آتا : ڈاکٹر جتیندر

9 جون 2019 (00 : 01 AM)   
(      )

 کٹھوعہ //مرکزی وزیر ڈاکٹر جتیندر سنگھ نے کہا ہے کہ حال ہی میں منعقدہ لوک سبھا انتخابات سے کئی سبق ملے ہیں ،جیسے کہ کٹھوعہ۔ اودہمپور۔ ڈوڈہ حلقہ سے  3.57 لاکھ ووٹوں سے جیتنا اور سب سے بڑا سبق یہ ہے کہ ووٹروں کو وکاس (ترقی) دکھائی دے سکتی ہے ،جسے دیگران نہیں دیکھ سکتے ہیں۔وہ ہفتہ کے روز یہاں وزیر بننے کے بعد پہلی مرتبہ بی جے پی ورکروں کو خطاب کر رہے تھے جھنوں نے انہیں وزیر بننے کے بعد کٹھوعہ میں والہانہ استقبال کیا۔انہوں نے کہا کہ متعدد سیاسی پارٹیوں کی مخالفت اور بعض میڈیا کے حلقوں میںترقیاتی کاموں کو نکارنے کے باوجود بھی ،جب یہ خدشہ تھا کہ اودہم پور۔کٹھوعہ میں بی جے پی کا امیدوار تقریباً1.5 لاکھ ووٹوں سے ہارے گالیکن بی جے پی کے کیڈر نے دن رات کام کرتے ہوئے پارٹی کی کامیابی  3.57 لاکھ ووٹوں سے یقینی بنائی۔ انہوں نے کہا کہ اس انتخاب سے یہ سبق ملتا ہے کہ مستقبل میں جب بھی کوئی لوگوں کا نمائندہ بننے کی خواہش رکھے گا، تو اسے لوگوں کی توقعاات کو پورا کرنا پڑے گا۔انہوں نے کہا کہ اس انتخاب میں وزیر اعظم نریندر مودی کی اعتباریت بی جے پی کیلئے کامیابی کا سب سے بڑا وجہ تھا ۔انہوں نے کہا کہ 2014کی مودی لہر 2019 میں دوبارہ سرگرم ہوئی کیونکہ لوگوں نے دیکھا کہ سرکار کی غریب عوام کیلئے سکیموں کا فائدہ غریبوں اور ضرورتمندوں تک پہنچ گیا ، جس نے عام آدمی کو مودی کیلئے ووٹ دینے کی جانب راغب کیا۔اس موقعہ پر انہوں نے مودی سرکار کے پانچ سال کے اقتدار کی حصولیابیوں کا شمار کیا ،جن میں غریبوں کو گیس کنکشن ، مرکزی معاونت کے میڈیکل کالج ،انجینئرنگ کالج، کیدیان گڑیال برج، انڈسٹریل بائیو ٹیک پارک، سئیڈ پراسسیسینگ پلانٹ،پاسپورٹ آفس، ہائی وے ولیج،وغیرہ شامل ہے۔