تازہ ترین

سوئیہ بگ بڈگام میں گرفتاریوں کیخلاف مظاہرے

مارپیٹ سے 2کم عمر نوجوان زخمی ، حالت نازک

27 مئی 2019 (00 : 01 AM)   
(      )

نیوز ڈیسک
سرینگر //وسطی ضلع بڈگام کے سوئیہ بگ علاقے میںفورسز کے ہاتھوں 2 نوجوانوں کا شدید ٹارچر کرنے سے ایک کی حالٹ نازک قرار دی جارہی ہے اور اسے صورہ اسپتال میں ڈبل وینٹی لیٹر پر رکھا گیا ہے جبکہ دوسرا جے وی سی میں زیر علاج ہے۔اس دوران گرفتاریوں اور زودکوب کرنے پر مقامی لوگوں نے احتجاجی مظاہرے کئے۔دھرمنہ سوئیہ بگ نامی گائوں میں مقامی لوگوں نے اتوار کو مظاہرے کئے اور وہ گرفتار نوجوانوں کی رہائی کا مطالبہ کررہے تھے۔انہوں نے الزام لگایا کہ فورسز اہلکاروں نے جمعہ کو پتھرائو کے بعد کئی نوجوانوں کی شدید مارپیٹ کی، جس کے دوران 7کم عمر نواجوانوں کو گرفتار بھی کیا گیا۔انکا کہنا تھا کہ ان میں سے 2نوجوانوں 14سالہ فاضل فیاض ملک ولد فیاض احمد ملک ساکن ہتھ ہرن سوئیہ بگ اور حمید اللہ شیخ ولد گلزار احمد شیخ ساکن دھرمنہ کو سنیچر کی دیر رات گئے زخمی حالت میں انکے لواحقین کے حوالے کیا گیا۔دونوں کو جے وی سی منتقل کیا گیا جہاں سے فاضل فیاض کو نازک حالت میں صورہ منتقل کیا گیا کیونکہ اسکے سر میں گہری چوٹ آئی تھی۔ڈاکٹروں کا کہنا ہے کہ فاضل فیاض کے دماغ میں خون جمع ہوگیا ہے اور اسکے لئے اگلے 72گھنٹے انتہائی نازک ہیں، اور اسکی سرجری کرلی گئی ہے۔میڈیکل سپر انٹنڈنٹ صورہ ڈاکٹر فاروق احمد جان کا کہنا ہے کہ مذکورہ لڑکے کی حالت انتہائی ناک ہے اور اسے ڈبل وینٹی لیٹر پر رکھا گیا ہے۔لوگوں نے بتایا جب انہوں نے فوج کو نوجوانوں کو رہا کرنے کے بارے میں پوچھا تو انہوں نے کہا کہ ہم نے وہ پولیس کے حوالے کئے ہیں۔ پولیس کا کہنا ہے کہ انہیں 3نوجوان سپرد کئے گئے ہیں۔