منریگاجاب کارڈ اسکینڈل | بی ڈی او سمیت3ملازمین منسلک،تحقیقات جاری

27 مئی 2019 (00 : 01 AM)   
(      )

خالدگل
اننت ناگ//حکومت نے بلاک ڈیولپمنٹ افسرکھوری پورہ کو دیگر دو اہلکاروں کے ساتھ ’گریٹرکشمیر‘اخبار کی طرف سے بے نقاب کئے گئے کئی کروڑ روپے کے منریگانقلی جاب کارڈ سکینڈ ل میں ملوث ہونے کی بنا پر منسلک کیا ہے۔تحقیقاتی کمیٹی کی ابتدائی رپورٹ کی بنیاد پر بی ڈی اوکھوری پورہ ،پنچایت سیکریٹری آکھورہ اورگرام روزگار سہایک اکھورہ کومزیداحکامات تک ڈائریکٹوریٹ آف رورل ڈیولپمنٹ کے ساتھ منسلک کیاگیاہے۔ایک سرکاری حکم کے مطابق یہ افسر/اہلکارڈائریکٹوریٹ آف رورل ڈیولپمنٹ کے ساتھ کمیٹی کی طرف سے حتمی رپورٹ پیش کئے جانے تک منسلک رہیں گے تاکہ مزیدکارروائی کی جائے۔ 14مئی کے ’گریٹرکشمیر‘میں شائع ایک رپورٹ کانوٹس لیتے ہوئے اس معاملے کی تحقیقات کرنے کیلئے کمشنرسیکریٹری رورل ڈیولپمنٹ شیتل نندانے ایڈیشنل سیکریٹری سدرشن کمار کی سربراہی میں ایک اعلیٰ سطحی کمیٹی تشکیل دی ۔ ڈائریکٹر رورل ڈیولپمنٹ کشمیر قاضی سروراورڈپٹی ڈائریکٹر پلاننگ محمداشرف پر مشتمل ٹیم نے فوری کارروائی کرتے ہوئے بلاک ڈیولپمنٹ دفتر کھوری پورہ کاساراریکارڈ ضبط کیااورمتعددگھروں کادورہ کرکے جاب کارڈس جو اُنہیں جاری کئے گئے تھے،کی اصلیت کی جانچ کی ۔ذرائع کے مطابق ابتدائی رپورٹ میں جاب کارڈس کی اجرائی میں زبردست بے ضابطگیاں پائی گئیں لیکن تحقیقاتی ٹیم کھوری پورہ کاپھر دورہ کرے گی تاکہ مزید تفصیلات حاصل کی جائے اور اس کے بعد حتمی رپورٹ پیش کی جائے گی۔ اخبار گریٹر کشمیر کی رپورٹ کے مطابق فراڈ طریقوں سے اداکی گئی اُجرتیں درمیانہ داروں اورٹھیکیداروں کے بنک اکائونٹس میں جمع ہوتی تھیں جنہیں مبینہ طور بلاک ڈیولپمنٹ دفتر میں رورل ڈیولپمنٹ افسروں نے منتخب کیاتھا۔ دستاویزات سے پتہ چلا ہے کہ منریگا اسکیم کے تحت نقلی اور جعلی ورکروں کیلئے جاب کارڈس جاری کئے گئے تھے اور اس طرح جموں کشمیر میں2008میں روبہ عمل لائی گئی مرکزی اسکیم میں بھاری پیمانے پر دھاندلیاں کی گئیں ۔ یہ بھی پتہ چلا ہے کہ کئی معاملوں میں سرکاری ملازمین ،فوت ہوئے افراداور کمسنوں کے نام بھی مستفیدین میں شامل تھے ۔کئی معاملوں میں ایک ہی فرد مختلف رجسٹریشن نمبروں پرکئی جاب کارڈ بنائے گئے تھے ۔فلیگ شپ پروگرام کے تحت دیہی علاقوں کے لوگوں جوسرکاری نوکری نہیں کرتے ہیں ،کو سوروزکاضمانتی روزگار فراہم کیاجاتا ہے ۔جاب کارڈ ایک کنبے کے سربراہ کو راشن کارڈ کی بنیاد پر دیاجاتا ہے۔
 

تازہ ترین