تازہ ترین

جگن موہن ریڈی وائی ایس آرکانگریس لیجسلیچر پارٹی لیڈر منتخب

اے پی کے تیسرے کم عمر وزیراعلی

25 مئی 2019 (14 : 10 PM)   
(      )

 حیدرآباد//وائی ایس آرکانگریس پارٹی کے صدر جگن موہن ریڈی وائی ایس آرکانگریس لیجسلیچر پارٹی لیڈر منتخب ہوگئے ۔تاڑے پلی میں واقع وائی ایس آرکانگریس کے کیمپ آفس میں منعقدہ مقننہ پارٹی کے اجلاس میں جگن کو لیڈر منتخب کرلیاگیا۔وائی ایس آرکانگریس کے رکن اسمبلی بوتسا ستیہ نارائنا نے جگن کو وائی ایس آرکانگریس مقننہ پارٹی لیڈر منتخب کرنے کی قرارداد پیش کی۔ارکان اسمبلی دھرمناپرساد راو اور کولوسو پارتھاسارتھی نے بعد ازاں یہ تجویز پیش کی جس کو منظورکرلیاگیا۔اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے جگن نے کہاکہ عوام کے بھروسہ کے نتیجہ میں ان کو اقتدار ملا ہے ۔اے پی میں 50فیصد رائے دہی ایک اچھی بات ہے ۔انہوں نے کہاکہ ناانصافی کی سزا خدا دیتا ہے ۔انہوں نے کہاکہ وائی ایس آرکانگریس کے 23ارکان اسمبلی کو تلگودیشم میں شامل کیاگیا تھالیکن اب صورتحال یہ ہوگئی ہے کہ تلگودیشم پارٹی صر ف 23ارکان اسمبلی تک ہی محدود ہوکر رہ گئی ہے ۔23مئی کو خدا نے چندرابابو کو سزاد ی ہے ۔2024میں وائی ایس آرکانگریس کو مزید اکثریت حاصل ہوگی۔انہوں نے کہا کہ بہتر حکمرانی اورترقی پر توجہ مرکوز کی جائے گی۔اے پی کی حکمرانی دیگر ریاستوں کے لئے مثالی ہوگی۔اسی دوران جگن کی حلف برداری تقریب کے لئے انتظامات کئے جارہے ہیں۔وائی ایس آرکانگریس پارٹی کے سربراہ وائی ایس جگن موہن ریڈی اے پی کے تیسرے کم عمر وزیراعلی بننے جارہے ہیں۔ان کی عمر46برس ہے ۔چندرابابونائیڈو متحدہ آندھراپردیش کے جب وزیراعلی تھے تو اُس وقت ان کی عمر 45برس تھے تاہم متحدہ ریاست کے سب سے کم وزیراعلی دامودر سنجیویا تھے ۔انہیں 36سال کی عمر میں ریاست کا وزیراعلی بنایاگیاتھا۔جگن موہن ریڈی کے والد آنجہانی راج شیکھرریڈی جب متحدہ اے پی کے وزیراعلی بنے تھے تو اس وقت ان کی عمر54برس تھی۔یو این آئی