تازہ ترین

کلکتہ میں امت شاہ کے روڈ شوو پر حملہ کی بی جے پی نے مذمت کی

16 مئی 2019 (00 : 01 AM)   
(      )

جموں //بھارتیہ جنتا پارٹی کے ریاستی یونٹ نے کلکتہ میں پارٹی صدر امت شاہ کے روڈ شوو پر ہوئے حملہ کی سخت مذمت کی۔ایک بیان کے مطابق پارٹی کے ریاستی جرل سیکرٹری(آرگنائزیشن) اشوک کول کی قیادت میں مظاہرین نے ایک دھرنا دیا،انکے ہمراہ ریاستی جنرل سیکرٹری ڈاکٹر نریندر سنگھ ،یدھ ویر سیٹھی و دیگر سینئر پارٹی لیڈران کے علاوہ سینکڑوں پارٹی کارکناں تھے۔ مظاہرین توی پل پر مہاراجہ ہری سنگھ کے مجسمے کے سامنے اپنے مُنہہ پر انگلی رکھ کر جمہوریت کے قتل کے خلاف ایک خاموش مظاہرہ کر رہے تھے۔یدھ ویر سیٹھی نے اس موقعہ پر اپنے خطاب میں ممتا بینرجی کی جانب سے مغربی بنگال میںغنڈہ گردی پر سخت مذمت کی۔انہوںنے کہا کہ ان سیاسی پارٹیوں نے غنڈہ گردی کو اپنی پالیسی بنایا ہے۔انہوں نے کہا کہ مغربی بنگال میں لا قانونیت ہے جس کا پر امن ریلی پر حملہ ایک ثبوت ہے۔انہوں نے کہا ممتا بینرجی مغربی بنگال میں وزیر اعظم نریدر مودی کی مقبولیت سے پریشان ہے اور آنے والے لوک سبھا انتخاب میں انہیں شکست دکھائی دے
رہی ہے جسکی وجہ سے بوکھلاہٹ میں اس نے امت شاہ کی ریلی پر حملہ کرایا ۔انہوں نے الیکشن کمیشن آف انڈیا کو واقعہ کا سنگین نوٹس لینے اور غنڈہ عناصر کے خلاف معقول کاروائی کرنے کا مطالبہ کیا۔ڈاکٹر نریندر سنگھ نے کہا کہ بی جے پی ایسے واقعات کی سخت الفاظ میں مذمت کر رہی ہے۔انہوں نے اسے ممتا بینرجی کی جانب سے سیاسی فائدہ لینے کی چلا سے تعبیر کیا۔مئیر چندر موہن ،ایم ایل سی اشوک کھجوریہ، منیش شرما ، کرن سنگھ ،اروند گپتا، پردمن سنگھ ، وینو کھنہ، ڈاکٹر پردیپ مہوترہ، بلدیو سنگھ بلاوریہ،جیت انگرال، گارو رام بھگت، راج وال، پریم گپتا، راجندر سنگھ چب، وینا گپتا، شیلجا گپتا، وکاس چودھری، چاند جی بھٹ،کلونت بھٹی، جے دیپ شرما ، گویند سرین ، بھارت بھوشن شرما ،اڈوکیٹ ہنر گپتا، کلدیپ کندھاری و دیگران بھی دھرنا میں موجود تھے۔