تازہ ترین

گورنمنٹ مڈل سکول دیوتاکی ایک سالہ پرانی عمارت کھنڈر بننے لگی

مقامی لوگوں کا محکمہ کے خلاف احتجاج، غیر معیاری میٹریل کے استعمال پر تحقیقات کا مطالبہ

24 اپریل 2019 (00 : 01 AM)   
(      )

جاوید اقبال
 مینڈھر//مینڈھر کے تعلیمی زون بالاکوٹ میں واقع گورنمنٹ مڈل سکول دیوتا کی حالت بیان سے باہر ہے ۔ حیران کن امر یہ ہے کہ اس سکول کی عمارت ایک سال قبل ہی تعمیر ہوئی تھی تاہم وہ طلباء کے بیٹھنے کے قابل نہیں رہ گئی ۔سکول کے گرد و نواح رہنے والے لوگوں نے عمارت کی خستہ حالی پر محکمہ کے خلاف احتجاج بھی کیا اور الزام عائد کیاکہ تعمیری کام میں غیر معیاری میٹریل کا استعمال کیاگیا جس کے نتیجہ میں یہ حال دیکھناپڑرہاہے ۔ انہوںنے بتایاکہ عمارت کا پلستر گرنا شروع ہوگیاہے جبکہ فرش بھی زمین سے اکھڑ گیاہے ۔ان کا کہنا تھا کہ متعلقہ محکمہ کی طرف سے کی گئی دیوار بندی بھی گر گئی ہے اور اس طرح سے لاکھوں روپے برباد کردیئے گئے ہیں۔مقامی سرپنچ حاجی ماجد چوہدری کا کہنا تھا کہ پرائمری سکول دیوتا میں غیر معیاری سامان استعمال کیا گیا اور عمارت کی موجودہ حالت کا ذمہ دار متعلقہ محکمہ اور ٹھیکیدار ہے ۔ان کا کہنا تھا کہ اس سکول کا2004میں درجہ بڑھاکر اسے مڈل بنایاگیاجس میں 50سے زائد طلباء زیر تعلیم ہیں لیکن عمارت ان کیلئے پُر خطر بنی ہوئی ہے ۔انہوںنے کہاکہ محکمہ کے ملازمین کی ملی بھگت سے غیر معیاری میٹریل کااستعمال کیاگیاہے اور کسی بھی وقت کوئی حادثہ رونماہوسکتاہے جس کی ذمہ داری متعلقہ حکام پر عائد ہوگی ۔انہوںنے کہاکہ تعمیر کے نام پر حد ہی کردی گئی ہے اور ایک سال کے اندر ہی عمارت کھنڈرات میں بدل گئی ہے ۔سرپنچ کے مطابق صرف مڈل سکول دیوتا ہی نہیں بلکہ دیگر سکولوں کا بھی ایسا ہی حال ہے اور عمارتیں تعمیر ہونے کے کچھ سال کے اندر ہی تباہ ہوجاتی ہیں ۔مقامی لوگوں نے گورنر سے اپیل کی کہ عمارتوں کی تعمیر پر ویجی لینس انکوائری کروائی جائے اور قصورواروں کے خلاف کارروائی ہو ۔