تازہ ترین

مزید خبریں

11 فروری 2019 (00 : 01 AM)   
(      )

نیو ڈسک
 
 

پاکستان کو سفید جھنڈا نہیں دکھائیں گے: راجناتھ سنگھ

 سرینگر//مرکزی وزیر داخلہ نے کانگریس سرکار پر برستے ہوئے کہا ہے کہ کانگریس نے نکسلواد اور علیحدگی پسندوں کے خلاف نرم رویہ اختیار کیا ہے جس کی وجہ سے علیحدگی پسندی اور نکسلواد کا رجحان بڑھ گیا ہے۔ وزیر داخلہ نے کہا کہ 3 سے 4 سال کے اندر ہندوستان سے نکسل واد ، علیحدگی پسندی اور انتہاپسندی کا صفایا کر دیا جائے گا۔کانگریس صدر راہل گاندھی کا نام لئے بغیر راج ناتھ سنگھ نے کہا ’’ کانگریس کے لیڈر کہتے ہیں ہماری حکومت آئے گی، تو کسانوں کے قرض معافی کئے جائیںگے‘‘۔ بہار کے سمستی پور ضلع میں منعقد ایک تقریب میں شرکت کرنے پہنچے مرکزی وزیر داخلہ راج ناتھ سنگھ نے پاکستان کو خبردار کرتے ہوئے کہا کہ اب سفید جھنڈا نہیں دکھایا جائیگا۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان ہمارا پڑوسی ملک ہے اور پہلی گولی ہماری طرف سے نہیں چلے گی۔ پاکستان کی جانب سے جب ایک گولی چلیگی تو پھر ہندوستان کی طرف سے گولیوں کی گنتی نہیں کی جائے گی۔وزیر داخلہ نے کہا کہ 3 سے 4 سال کے اندر ہندوستان سے نکسل واد کا صفایا کر دیا جائیگا۔ 
 
 
 

ڈاکٹرفاروق کی اجمیر شریف میں حاضری 

کشمیر میں مکمل امن لوٹ آنے اور ہندپاک دوستی کی دعا کی

سرینگر// نیشنل کانفرنس صدر ڈاکٹر فاروق عبداللہ نے اتوار کو درگاہ حضرت خواجہ معین الدین چستی  ؒ واقعہ اجمیر شریف میں حاضری دی ۔ ڈاکٹر عبداللہ نے اس موقعہ پر اسلام کی سربلندی ،فتح ونصرف ، عالم انسانیت کی بقا ، کشمیر میں مکمل امن لوٹ آنے کے ساتھ ساتھ ہند پاک دوستی کے لئے دعا کی ۔ انہوں نے کہا کہ کشمیری عوام اس وقت نہایت تباہ کن دور گزر رہی ہے اور ہر لحاظ سے پریشان حال ، اقتصادی بدحالی اور معاشی طور پر عدم تحفظ کا شکار ہے جبکہ خونین واقعات باعث پریشانی بنے ہوئے ہیں ۔
 
 
 

مسئلہ کشمیر کے حل میں بھارت کو سب سے بڑی رکاوٹ :ملیحہ لودھی 

سرینگر//اقوام متحدہ میں پاکستان کی مستقل مندوب ملیحہ لودھی کا کہنا ہے کہ عالمی طاقتوں کی سیاسی حکمت عملی کشمیر اور فلسطین کے مسائل کے حل میں رکاوٹیں پیدا کر رہی ہیں۔ایک برطانوی اخبار کو انٹرویو دیتے ہوئے ملیحہ لودھی نے عالمی طاقتوں پر زور دیا کہ وہ اقوام متحدہ کی قرار داد کے مطابق ’کشمیر‘ اور ’فلسطین‘ کے تنازعات کو حل کرنے میں مدد کریں۔ملیحہ لودھی نے مسئلہ کشمیر کے حل میں بھارت کو سب سے بڑی رکاوٹ قرار دیا جبکہ فلسطین کے تنازع کے حل میں اسرائیل کو سب سے بڑی رکاوٹ قرار دیا۔ملیحہ لودھی نے کشمیر اور فلسطین کے عوام کی جانب سے کئی دہائیوں سے جاری حق خود ارادیت کی کوششوں کو واضح کرتے ہوئے کہا کہ ان دونوں خطوں کے مسائل میں مماثلت ہے۔انہوں نے کہا کہ مسلم امہ میں اکثر یہ سوال کیا جاتا ہے کہ ’مسئلہ کشمیر اور مسئلہ فلسطین کے حوالے سے اقوام متحدہ کی سیکورٹی کونسل کی واضح قراردادوں کو نافذ کیوں نہیں کیا جاتا‘۔ملیحہ لودھی کا کہنا تھا کہ پاکستان اقوام متحدہ کی قرار داد کی روشنی میں مسئلہ کشمیر کا پر امن حل چاہتا ہے لیکن اس معاملے میں بھارت سیاسی ہٹ دھرمی دکھاتے ہوئے پاکستان کے ساتھ اس معاملے پر مذاکرات کی پیشکش کو مسلسل مسترد کر رہا ہے۔مسئلہ فلسطین کے حوالے سے انہوں نے کہا کہ فلسطین کا معاملہ واضح ہے اور اس کے لیے اقوام متحدہ کی سیکورٹی کونسل دو ریاستی حل نافذ کرنا چاہتی ہے جس میں اسرائیل اپنی سیاسی ہٹ دھرمی کا مظاہرہ کر رہا ہے۔
 
 
 

انقلاب ایران کی 40 ویں سالگرہ

 انجمن شرعی شیعیان کے اہتمام سے بڈگام میں سمینار

سرینگر//انجمن شرعی شیعیان کے اہتمام سے بڈگام میں ایران انقلاب کی 40 ویں سالگرہ کے موقعہ پر ایک پْروقارسمینار کا انعقاد کیا گیا جس میں وادی کی کئی معروف دینی و سماجی شخصیات کے علاوہ مفکرین و دانشوروں کی خاصی تعداد نے شرکت کی۔ جن معززین نے انقلاب اسلامی ایران کی اہمیت کے حوالے سے اپنے خیالات کا اظہار کیا ان میں جماعت اسلامی کے ترجمان ایڈوکیٹ زاہد علی، انجمن حمایت الاسلام کے صدر مولانا خورشید احمد قانونگو ، نائب مفتی ناصر الاسلام ، آغا سید یوسف الموسوی، مولوی گلزار احمد امام و خطیب نصراللہ پورہ بڈگام اور ایڈوکیٹ غلام احمد نیازی شامل ہیں۔سمینار کی صدارت انجمن شرعی شیعیان کے سربراہ آغا سید حسن نے کی۔انہوں نے ایرانی قوم و قیادت کو انقلاب کی 40 ویں سالگرہ پر ہدیہ تہنیت پیش کرتے ہوئے کہا کہ ایران سے شیعیان کشمیر کی محبت اور وابستگی کی بنیاد ایران کی سرزمین یاایرانی ہم مسلک قوم نہیں بلکہ اسلامی انقلاب اور وہاں قائم نظام ولایت فقیہ ہے جس نے عصر حاضر میں مسلمانان عالم کو اپنی عظمت اور شان رفتہ کی بحالی کے تقاضوں کا احساس دلایا۔ آغا حسن نے کہا کہ انقلاب ایران کی کامیابی کا سہرا ان شہداء کے سر جاتا ہے جنہوں نے اس راہ میں اپنی عزیز جانوں کا نذرانہ پیش کیا اور آج بھی ایرانی قوم اُن قربانیوں کو یاد کرتی ہے۔ جماعت اسلامی کے ترجمان ایڈوکیٹ زاہد علی نے ایران کی عظمت بیان کرتے ہوئے کہا کہ ایرانی قوم نے خود انحصاری اور خود اعتمادی کا بھر پور مظاہرہ کرکے نہ صرف ملک سے شہنشاہیت کا خاتمہ کیا بلکہ اسلامی نظام قائم کرکے ملک کو دنیا کی استعماری قوتوں کے اثرونفوذسے پاک کیا۔مولانا خورشید احمد قانونگو نے کہا کہ حضرت امام خمینیؒ نے اپنے کردار و عمل کو سیرت نبویؐ کے سانچے میں ڈال کر ملک میں اسلامی نظام قائم کرنے کی تحریک شروع کی۔
 

دنیا بھر کی مزاحمتی لیڈر شپ کیلئے

 امام خمینیؒ رول ماڑل: مولانا عباس انصاری

سرینگر// انقلاب اسلامی ایران کی چالیسویں سالگرہ کے موقع پر اتحاد المسلمین نے تمام عالم انسانیت بالخصوص ایرانی قوم و قیادت کو مبارکباد پیش کی ہے۔ تنظیم کے سربراہ مولانا محمد عباس انصاری نے اپنے ایک تہنیتی پیغام میں عالم بشریت، ایرانی قوم و قیادت بالخصوص آیت اللہ خامنہ ای کی خدمت میں مبارکباد پیش کرتے ہوئے کہا کہ بانی انقلاب حضرت امام خمینی کی صالحانہ قیادت نے جس طرح ظلم و جور پر استوار طویل سلسلہ شہنشاہیت کا پردہ چاک کرکے اس کا جنازہ نکالا اس سے مظلوم قوموں میں ہمت و استقلال پیدا ہوگئی اور اس انقلاب کی برکات سے آج دنیا بھر کے مستضعفین فخر سے سر اونچا کرکے ظالم قوتوں کے خلاف نفرت کا برملا اظہار کررہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ امام خمینی نے سخت ترین مصائب و مشکلات برداشت کئے یہاں تک کہ امام راحل کو جلاوطنی کے کھٹن اور دشوار ترین سالہا سال گزارنے پڑے لیکن حق بات کہنے اور مظلوم عوام کی حمایت و رہنمائی سے ایک قدم بھی پیچھے نہ ہٹنے بلکہ سیسہ پلائی ہوئی دیوار کی مانند اپنے قول و فعل پر ڈٹے رہ کر امام راحل نے ایک ایسا کارنامہ انجام دیا جس سے دنیا  کے بڑے سیاستدان بھی انگشت بہ دندان رہ گئے۔ مولانا عباس انصاری نے کہا کہ ایران انقلاب تحریک کربلا کی ایک کرن تھی جس نے یزید وقت کو سر عام ذلیل و رسوا کیا اور ایرانی قوم کا مستقبل بھی تابناک کردیا۔
 
 
 

مزدور کی پراسرار حالت میں موت 

رمیش کیسر

نوشہرہ //نوشہرہ کے ڈنڈیسر سٹون کریشر پرکام کررہے ایک مزدور کی پراسرار حالت میں موت ہوگئی جس پر پولیس نے کیس درج کرکے تحقیقات شروع کردی ہے ۔ذرائع کے مطابق 55سالہ گوپال داس ولد موہن لعل ساکن دبڑ پوٹھہ نوشہرہ سیڑھی سٹون کریشر ڈنڈیسر میں گزشتہ بیس روز سے مزدوری کررہاتھا جہاں رات کے گیارہ بجے اسکی صحت اچانک خراب ہوگئی اور اسے فوری طور پر ساتھیوں نے وہاں سے اٹھاکر ہسپتال پہنچایاجہاں ڈاکٹروں نے مردہ قرار دیا۔ 
 
 

روڈ سیفٹی ہفتہ

شوپیان میں کوچنگ مراکز میں جانکاری فراہم

شاہد ٹاک

 شوپیان// روڈ سیفٹی ہفتہ کے سلسلے میں ضلع شوپیان کے موٹر وہیکلز ڈپارٹمنٹ نے کوچنگ مراکز میں جاکر طلاب کو ٹریفک قوانین کے بارے میں جانکاری دی۔ان کوچنگ مراکز میں بڑی تعداد میں اسکولی بچوں کے علاوہ دیگر معززین نے شرکت کی۔علاوہ اذیں اس موقعہ پر اسکولی طلاب کو ٹریفک قوانین کے بارے میں جانکاری دی ۔اس دوران ٹریفک انسپکٹر عرفان الاسلام نے طلاب کو ٹریفک قوانین پر عمل کرنے کی تلقین کرتے ہوئے کہا کہ اپنے والدین کو بھی ان قوانین کے تئیں بیدار کریں۔
 
 

کپوارہ میں کئی صحافیو ں کو اعزازات سے نوازا گیا 

کپوارہ//ہفتہ رو ڈ سیفٹی کے حوالہ سے کپوارہ میں اتوار کو اختتامی تقریب موٹر ویکل محکمہ کے احاطہ میں منعقد کی گئی جسمیں ضلع انتظامیہ اور پولیس کے اعلیٰ افسران اور سکولی بچوں کے علاوہ ڈرائیوروں اور عام لوگو ں کی ایک بڑی تعداد نے شرکت کی ۔اس موقع پر ٹریفک قوانین سے متعلق مکمل جانکاری فراہم کی گئی ۔اس موقع پر اسسٹنٹ رو ڈ ٹرانسپورٹ آ فیسر مختار احمد صوفی نے کہا کہ گا ڑی چلانے کے دوران ڈرائیور کی توجہ مکمل طور گا ڑی چلانے کی طرف ہونا چایئے تاکہ کوئی بڑا حادثہ پیش نہ آئے ۔اس موقع پر کپوارہ سے تعلق رکھنے والے صحافیو ں اشرف چراغ (کشمیر عظمیٰ )کو صحافتی میدان میں لوگو ں کے مسائل اجاگر کرنے پر انعام سے نواز گیا جن دیگر نامہ نگاروں کو اعزاز سے نوازا گیا ان میں نیوز 18کے یحیٰ سلطان ، پیر ذادہ زبیر ،نثار شاہین شامل ہیں ۔
 
 

صحرائی کا پارٹی کارکن کے ساتھ اظہار رنج

 سرینگر// تحریک حریت چیئرمین محمد اشرف صحرائی نے رُکن تحریک حریت ثنا اللہ لون کے والد کی وفات پر گہرے رنج وغم کا اظہار کرتے ہوئے غمزدہ لواحقین کے ساتھ تعزیت کی اور مرحومین کے حق میں دعائے مغفرت کی۔ صحرائی کی ہدایت پر تحریک حریت جنرل سیکریٹری امیرِ حمزہ شاہ، محمد یوسف لون کپواڑہ گئے جہاں انہوں نے غمزہ خاندان کے ساتھ ہمدردی اور تعزیت کا اظہار کیا۔ اس دوران تحریک حریت نے ضلع کپواڑہ کے ذمہ داروں فاروق احمد بٹ صدرِ ضلع کپواڑہ، جاوید احمد میر صدرِ تحصیل کپواڑہ اور عبدالحمید ماگرے اور ثنا اللہ، کو گرفتار کرکے پولیس اسٹیشن کپواڑہ میں نظربند رکھنے کی شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے کہا کہ مذکورہ ذمہ داران رُکن تحریک حریت ثنا اللہ لون کے گھر جاکر ان کے والد کی وفات پر ان سے تعزیت کرنے کے لیے جارہے تھے، مگر پولیس نے ان کو گرفتار کرکے پولیس تھانے میں بند کردیا۔ تحریک حریت نے پولیس کی اس کارروائی کو غیر انسانی قرار دیتے ہوئے اس کی شدید الفاظ میں مذمت کی۔
 
 

شاہ فیصل کے بعد اوڑی کے سرکاری ملازم کا استعفیٰ

اوڑی//ظفر اقبال// اوڑی کے ایک سرکاری ملازم نے نوکری سے مستعفی ہوکر کورپشن اور خون ریزی کے خلاف جنگ میں شریک ہونے کا اعلان کیاہے ۔ اوڑی کے کالگی نامی گائوں میںرہائش پذیرالطاف سلیم خان بحیثیت استاد اپنی نوکری کررہے تھے۔ انہوںنے کشمیر عظمیٰ کو بتایاکہ جموں کشمیر کورپشن کا ایک مرکز بن چکا ہے اور کشمیر میں دن بہ دن خون ریزی بڑ رہی ہے جس کے خلاف وہ احتجاجی طور مستعفی ہورہے ہیں۔اْنہوں نے کہاکہ وہ ایک دور دراز گائوں سے تعلق رکھتے ہیں جہاں این ایچ پی سی کے پاور پرجیکٹ ہیں جن کی آمدنی کروڑوں ہے لیکن اوڑی کے عوام کو کوئی فائدہ نہیں مل رہا ہے اور میں اِس کے لئے بھی لڑوں گا۔انہوں نے ہندوستان اور پاکستان کی حکومتوں سے اپیل کی کہ وہ  مسئلہ کشمیر کے حل کے لئے واضح پالیسی اختیار کریں۔
 
 

سونا واری میں یوتھ نیشنل کانفرنس کا کنونشن

سرینگر // جموں وکشمیر نیشنل کانفرنس کی جانب سے حلقہ انتخاب سونا واری میں پارٹی کے ایک کنونشن سے خطاب کرتے ہوئے پارٹی کے نائب صدر یوتھ صوبہ کشمیر نے کہا کہ نیشنل کانفرنس ہی ریاست کے تینوں خطوں کی وحدت ، انفرادیت ، سالمیت اور شناخت کو قائم ودائم ہے ۔انہوںنے کہا کہ نیشنل کانفرنس نے اپنے ترجیحات میں افسپا جیسے کالے قوانین کے ساتھ ساتھ پی ایس اے کو ہٹانے کا فیصلہ لیا ہے ۔انہوں لوگوں سے اپیل کی کہ وہ آنے والے الیکشن میں اپنے نمائندوں کو کامیاب بنانے کے لئے کمر بستہ ہونا چاہے۔
 
 
 

کرناہ کلچرل کلب کے اہتمام سے تعزیتی مجلس کا اہتمام 

 سرینگر //شاداب کریوا شوپیاں کے محمد اشرف منہاس کی وفات پر پہاڑی کلچرل کلب ٹنگڈار کے اہتمام سے ایک تعزیتی مجلس کا انعقاد کیا گیا ۔جس میں تحصیل کرناہ سے وابستہ مختلف سیاسی سماجی وادبی تنظیموں کے نمائندگان کے علاوہ سیول سوسائٹی کرناہ کے عہدیداران نے گہرے دکھ اور صدمے کا اظہار کیا ۔پہاڑی کلچرل کلب کرناہ کے صدر عبدالرشید قریشی کے علاوہ محمد مقبول خان ، عبدارشید لون ، غلام حسن ڈار بشیر احمد باغاتی ،حیدرندیم وسیول سوسائٹی کے چیئرمین پیر زادہ سراج الدین قریشی نے مرحوم کے لواحقین بالخصوص ظفر اقبال منہاس ودیگر افراد خانہ کے ساتھ گہری ہمدردی کا اظہار کیا۔ 
 
 

ماگام میں کشمیری مشاعرہ کا اہتمام

سرینگر//ضلع بڈگام کے اگری کلاں ماگام میں اتوار کو ایک کشمیری مشاعرے کا انعقاد ہوا جس میں وادی کے کہنہ مشق شعراء نے شرکت کی اور اپنے کلام سے حاضرین محفل کو محظوظ کیا۔ مشاعرے کا اہتمام وادی کی ادبی تنظیم ’’ بزم ادب بٹہ پورہ ‘‘ نے کیا تھا محفل میں غلام محی الدین حامد ، عبدلعزیز ، نزید شاہد ، ساگر گل کاوسی ، میر غلام نبی شاہین ، محمد یوسف ندیم، مشتاق احمد مشتاق ، محمد اکبر کلان، حفیظ اللہ حفیظ، غلام نبی عارف ، سعید حامد بخاری اور جعفر جمیل موجود تھے۔منتظمین کے مطابق اس مشاعرہ کا بنیادی مقصد کشمیری زبان کی ترقی و ترویج اور نو مشق شعراء کی حوصلہ افزائی تھی۔ انہوں نے کہا کہ نو مشق شعرا کو کہنہ مشق شعرا کے ساتھ مشترکہ پلیٹ فارم کے اشتراک کا موقعہ ملا ،جس سے ان میں اعتماد سازی پیدا ہوگی۔
 
 
 

بی جے پی نے جموں کے مفادات کے ساتھ سمجھوتہ کیا:رانا

یوتھ کانگریس بلاک متھوار اکائی کی این سی میں شمولیت 

جموں//نیشنل کانفرنس کے صوبائی صدردویندرسنگھ رانانے کہاکہ بی جے پی جموں کے مفادات کوزک پہنچانے کی وجہ سے عوام کے سامنے بے نقاب ہوچکی ہے ۔انہوں نے کہاکہ جموں کے نام نہاد چیمپئن بننے والی بی جے پی نے جموں کے مفادات کوشدیدنقصان پہنچایااورپی ڈی پی کے سامنے جموں کے مفادات بیچ دیئے اوراپنے گھٹنے ٹیک دیئے۔ ان خیالات کااظہار دویندرسنگھ رانانے اسمبلی حلقہ نگروٹہ کے جنڈیال میں عوامی میٹنگ سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔اس دوران متھواربلاک کے پورے یوتھ کانگریس یونٹ نے بلاک صدردیال سنگھ (لکی ) کی قیادت میں نیشنل کانفرنس میں شمولیت کی ۔اس دوران این سی میں شمولیت کااظہارکرنے والوں نے کہاکہ ہم نیشنل کانفرنس کی پالیسیوں اورخاص طورپر دویندرسنگھ راناایم ایل اے نگروٹہ کی تعمیروترقی کی اپروچ سے متاثرہوکر این سی میں شامل ہوئے ہیں۔رانانے یوتھ کانگریس کارکنان کااین سی میں والہانہ استقبال کیا۔
 
 

مہو میں برفباری سے سکول اور مکان تباہ

 مہو منگت کیلئے پانچ ڈاکٹروں پر مشتمل دو ٹیمیں تشکیل

محمد تسکین

بانہال // بھاری برفباری کی وجہ سے مہو میں ایک رہائشی مکان اور پرائمری سکول بجناڑی مہو کو شدید نقصان پہنچا ہے جبکہ گنوت ، راج گڑھ ،حالہ دھندراٹھ ، سلدھار ، لک گلی ، کونڈی ، جٹگلی ، پوگل پرستان ، نیل ، کھڑی اور رامسو کی تحصیلوں میں ہزاروں کی تعداد میں لوگ بھاری برفباری کی وجہ سے مشکلات میں ہیں۔  بھاری برفباری کی وجہ سے جلع رام بن کے بیشتر علاقوں میں بجلی ، پینے کے پانی اور سڑک کا نظام  پچھلے کئی ہفتوں سے ٹھپ ہے اور لوگوں کی زندگی اجیرن بن گئی ہے۔ بھاری برفباری کی وجہ سے متاثر مہو منگت ، باوا اور اکھرن کی محصور آبادی کیلئے ڈپٹی کمشنر رام بن شوکت اعجاز بٹ اور چیف میڈیکل افسر رام بن ڈاکٹر سیف الدین خان نے پانچ ڈاکٹروں اور چار نیم طبی عملے کے ارکان پر مشتمل دو ٹیموں کو علاقہ مہو منگت روانہ کرنے کے احکامات صادر کئے ہیں تاکہ طبی سہولیات کی عدم دستیابی سے دوچار عوام کو راحت پہنچائی جا سکے۔ اِن ٹیموں کو پیر کی صبح کھڑی پرائمری ہیلتھ سینٹر میں رپورٹ کرنے کیلئے کہا گیا ہے۔ 
 
 

 نوگام بانہال میں ہرن کو پکڑ کر محکمہ جنگلی حیات کے سپرد کیاگیا 

محمد تسکین 

بانہال // بانہال کے نوگام  علاقے میں ایک منفرد واقع میں لوگوں نے برف میں پھنسے ایک ہرن کو پکڑ کر اسے محکمہ جنگلی حیات کے سپرد کر دیا ہے۔ اگرچہ بانہال کے نوگام ، زبن اور چنگ مال چنجلو کی پہاڑیوں پر اس نایاب جانور کی موجودگی کے بارے میں ماضی سے شواہد مل رہے ہیں تاہم کم و بیش چالیس سال بعد بانہال کے علاقے سے ہرن کی موجودگی نے متعلقہ محکمہ پر کئی سوالات پیدا کئے ہیں اور اس نایاب جنگلی جانور کے تحفظ اور موجودگی کو لیکر محکمہ جنگلی حیات کے پاس کوئی خاص خبر اورمنصوبہ ہی نہیں ہے۔ لوگوں کی طرف سے ہرن پکڑنے کی خبر کے بعد پولیس، محکمہ جنگلی حیات اور محکمہ جنگلات کے ملازمین نوگام بانہال پہنچے اور عوام نے بھر پور تعاون کا مظاہرہ کرتے ہوئے پکڑے گئے ہرن کو محکمہ کے سپرد کیا۔ 
 
 
 
 
 
 
 

سابق ممبراسمبلی ڈاکٹر شفیع کا پی ڈی پی کو خیرآباد

سرینگر// پی ڈی پی کے سابق ممبر اسمبلی بیروہ ڈاکٹر محمد شفیع نے اتوار کو پارٹی سے ناطہ توڑنے کا اعلان کیا۔ڈاکٹر محمد شفیع نے اس سلسلے میں پی ڈی پی صدر محبوبہ مفتی کے نام ایک مکتوب روانہ کیا جس میں اُن کی طرف سے پارٹی کی بنیادی ممبر شپ سے مستعفی ہونے کا اعلان کیا گیا۔مکتوب میں کہا گیا ’’ میں ذاتی وجوہات کی بنیاد پر پی ڈی پی کی بنیادی رکنیت سے مستعفی ہوتاہو‘‘۔ ڈاکٹر محمد شفیع نے2008کے اسمبلی انتخابات میں بیروہ اسمبلی حلقہ سے جیت حاصل کی تھی،تاہم گزشتہ انتخابات میں اُنہیں نیشنل کانفرنس کے نائب صدر اور سابق وزیر اعلیٰ عمر عبداللہ سے شکست کا سامنا کرنا پڑا تھا۔
 
 
 
 

صوبائی درجے کے حق میں کشتواڑ میں پی ڈی پی کی ریلی

بھاجپا نے عوامی جذبات سے کھلواڑ کیا: فردوس ٹاک 

ڈار محسن 

کشتواڑ//صوبائی درجے کے حق میں کشتواڑ میں پی ڈی پی نے احتجاجی ریلی نکالی جس کی قیادت ممبر قانون ساز کونسل فردوس احمدٹاک نے کی۔اس موقعہ پر نعرے بازی کرتے ہوئے خطہ چناب کیلئے صوبائی درجے کا مطالبہ کیاگیا۔اپنے خطاب میں فردوس ٹاک نے کہاکہ 2014کے انتخابات میں بھاری منڈیٹ ملنے کے باوجود بھارتیہ جنتا پارٹی نے خطہ چناب کو نظرانداز کردیااورعوام کے جذبات کے ساتھ کھلواڑ کیاگیا۔ٹاک نے کہا کہ خطہ چناب ہر لحاظ سے صوبائی درجے کا مستحق ہے لہٰذا گورنر انتظامیہ کو بنا کسی سیاسی دباؤ اس مانگ کو پورا کرناچاہئے ۔ان کاکہناتھاکہ خطہ پیر پنچال اور خطہ چناب کی یہ دیرینہ مانگ ہے تاہم دونوں خطوں کو نظرانداز کیاگیا ۔ انہوںنے اس مانگ کی مخالفت کرنے پر مرکزی وزیر مملکت جتیندر سنگھ  کی کڑی تنقید کرتے ہوئے کہاکہ جتیندر سنگھ کو یہ سمجھناہوگاکہ خطے کے لوگ انہیں پھر سے اپنا نمائندہ چننے کی غلطی نہیں کریں گے ۔ انہوں نے کہاکہ سنگھ کو مستقل طور پر دہلی میں گھر بنالیناچاہئے کیونکہ ریاست کے لوگ اب انہیں کبھی قبول نہیں کریں گے ۔انہوں نے نیشنل کانفرنس کو بھی تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہاکہ اس جماعت کی طرف سے خطہ چناب کو بنیادی حقوق و بنیادی سہولیات فراہم کروانے کیلئے شرائط رکھی جارہی ہیں جو نہایت گندی سیاست ہے ۔ٹاک نے تمام سیاسی جماعتوں ، سماجی کارکنوں، وکلا حضرات، تجارتی طبقہ و نوجوانوں سے اپیل کی کہ وہ خطہ چناب کو صوبائی درجہ دینے کیلئے آواز بلند کریں ۔احتجاجی ریلی میں ضلع صدر ایڈووکیٹ شیخ ناصر، زونل صدر ارشد گیری، ضلع یوتھ صدر واصل ڈولوال و دیگران بھی موجودتھے ۔
 
 
 

کرگل کے عوام کی حمایت میں شیعہ فیڈریشن  متحرک

چناب اور پیر پنچال خطوں کو بھی صوبوں کا درجہ دیاجائے 

جموں//شیعہ فیڈریشن نے کرگل کے عوام کے مطالبات کی حمایت کرتے ہوئے کہاہے کہ حکومت لیہہ پر ہی کیوں مہربان ہے اور سب کا ساتھ سب کا وکاس کانعرہ کہاں چلاگیا۔فیڈریشن نے خطہ پیر پنچال اور خطہ چناب کیلئے بھی صوبائی درجے کے مطالبے کی حمایت کا اعلان کیا۔ ایک بیان میں فیڈریشن کے صدر عاشق حسین خان نے کہاکہ کرگل ضلع کی آبادی لیہہ سے بہت زیادہ ہے لیکن بدقسمتی سے اس ضلع کو ہر سطح پر نظرانداز کیاگیااور اب صوبائی صدردفتر کو بھی لیہہ میں قائم کرکے ایک اور ناانصافی کی گئی ۔ انہوں نے کہاکہ کرگل کے عوام کئی روز سے کرگل اسکردو تاریخی راستہ کھولنے کی مانگ کررہے ہیں لیکن انہیں کوئی سننے کو بھی تیار نہیں۔ انہوںنے کہاکہ حکومت یا انتظامیہ عوامی مسائل حل کرنے کیلئے ہوتی ہے لیکن یہاں سب کچھ الٹاہورہاہے اور مسائل حل کے بجائے انتشار پھیلانے کے اقدامات کئے جارہے ہیں۔ عاشق خان نے کہاکہ کرگل کے لوگوں کا احتجاج مبنی برحق ہے اور انہیں بھی حق ملناچاہئے ۔انہوں نے کہاکہ مرکزی حکومت ’سب کا ساتھ سب کا وکاس‘ کے نعرے سے برسر اقتدار آئی لیکن اس نعرے کا کیا یہی مفہو م ہے کہ ایک علاقے کونظرانداز کیاجائے اور دوسرے کو سب کچھ دے دیاجائے ۔ انہوں نے کہاکہ کرگل کے لوگوں کے مطالبات پورے کئے جائیں اور ان کی آواز سنی جائے ۔عاشق خان نے کہاکہ خطہ پیرپنچال اور خطہ چناب کے صوبائی درجے کے مطالبات پر بھی غور کیاجائے اور ان دونوں خطوںکو بھی نظرانداز نہیں کیاجاناچاہئے ۔ فیڈریشن صدر نے کہاکہ بدقسمتی سے ایسے فیصلے کئے جارہے ہیں جن کا ریاست کی وحد ت پر اثر پڑنے کا اندیشہ ہے اوراس سے بھائی چارہ بھی متاثرہوسکتاہے ۔
 
 
 
 
 
 
 

فریڈم پارٹی کا شبیر شاہ کے ساتھ اظہار تعزیت

سرینگر// ڈیمو کریٹک فریڈم پارٹی نے محبوس پارٹی سربراہ شبیر شاہ کے موسا کے انتقال پر گہرے رنج و غم کا اظہار کیا ہے۔سید محمد عبد اللہ ساکن سرنل بالا اسلام آباد گذشتہ رات دیر گئے داعی اجل کو لبیک کہہ گئے۔پارٹی ترجمان نے کہا کہ شبیر شاہ کے متعدد قریبی رشتہ دار ایسے تھے جنہوں نے شبیر شاہ کی غیر موجودگی میں ہی انتقال کیا کیونکہ سینئر مزاحمتی قائدمختلف جیلوں کے اندر ایام اسیری کاٹ رہے تھے۔ترجمان نے مرحوم کے ایصال ثواب اور جنت نشینی کی دعا کرتے ہوئے لواحقین کے ساتھ یکجہتی کا اظہار کیا۔
 
 

صحرائی کامہلوک میر حفیظ اللہ کے لواحقین سے اظہار یکجہتی

 سرینگر// تحریک حریت چیئرمین محمد اشرف صحرائی کی قیادت میں محمد یوسف لون، سید امتیاز حیدر اور ضلع صدراسلام آباد نے میر حفیظ اللہ کے گھر واقعہ بڈرو اچھہ بل اسلام آباد جاکر موصوف کے اہل خانہ کی خیروعافیت دریافت کی۔ اس موقعہ پر موصوف کی اہلیہ نے میر حفیظ اللہ کے نامعلوم افراد کے ہاتھوں ہلاکت پر حکومت کی خاموشی پر افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ پولیس نے اس قتل ناحق کے بارے میں مجرمانہ خاموشی اختیار کی جبکہ میر حفیظ اللہ نے جاں بحق ہونے سے قبل پولیس کو دھمکی آمیز فون کالوں کی تفصیلات فراہم کی تھیں لیکن پولیس نے نہ تب اس معاملے کو سنجیدگی سے لیا اور نہ اب تحقیقات کے بارے میں کوئی پیش رفت دکھائی دیتی ہے۔انہوں نے کہا کہ جن فون نمبرات سے میر حفیظ اللہ کو دھمکیاں مل رہی تھیں وہ فون نمبرات میر حفیظ اللہ نے ضلع کے پولیس کو فراہم کئے تھے، لیکن پولیس نے اس قتل ناحق کے قاتلوں کو بے نقاب کرنے کے لیے کوئی سنجیدہ کوششیں نہیں کی۔ صحرائی نے کہا کہ یہ ایک انتہائی حساس مسئلہ ہے اورپولیس کو اس حساس مسئلے کو سنجیدگی سے لینا چاہئے کہ میر حفیظ اللہ کو کن بنیادوں پر قتل کیا گیا اور آج تک قاتلوں کے بارے میں کیوں نہیں بتایا گیا۔
 
 
 

ڈی سی شوپیان کا کئی علاقوں کا دورہ

شاہد ٹاک 

شوپیان//ڈپٹی کمشنر شوپیان ڈاکٹر اویس احمد نے ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر اور محکمہ آر اینڈ بی اور تحصیلدار کیلر اور باقی افسران کے ہمراہ کیلر کے مختلف علاقوں کا دورہ کرکے برف سے پیدا شدہ صورتحال کا جائزہ لیا۔ڈپٹی کمشنر نے کیلر کے مختلف علاقوں کا دورہ کرکے برف سے پیدا شدہ صورتحال کا جائزہ لیا۔ ڈپٹی کمشنر نے محکمہ آر اینڈ بی کو ہدایت دی کہ کیلر کی اندرونی سڑکوں سے فوری طور برف ہٹاکر آمدو رفت کے قابل بنایا جائے تاکہ لوگوں کومزید مشکلات کا سامنا نہ کرنا پڑے۔انہوں نے عوامی جلسے سے بھی ملاقات کی ۔اس دوران ڈپٹی کمشنر نے اُن کے مسائل سنے اور یقین دہانی دی کہ انکے مشکلات کا ازالہ جلد از جلد کیا جائے گا۔
 
 
 

درماندہ مسافروں کو فوری طور کشمیر منتقل کیا جائے:تاریگامی/بخاری /ویری

مفت قیام وطعام اور طبی سہولیات کا انتظام کرنے کی اپیل

جموں//سی پی آئی ایم کے سینئر رہنما محمد یوسف تاریگامی نے گورنر انتظامیہ پر زور دیاہے کہ بس اڈہ جموں اور دیگر مقامات پر پچھلے دس روز سے درماندہ مسافروں کو فوری طور پر کشمیر منتقل کرنے کے اقدامات کئے جائیں کیونکہ ان مسافروں میںسے بیشتر کے پاس اب کھانے پینے کیلئے بھی کچھ نہیںبچاہے ۔اپنے ایک بیان میں تاریگامی نے کہاکہ افسوسناک بات ہے کہ دس دنوں سے مسافربشمول خواتین،بچے اور بزرگ بس اڈہ جموں اور دیگر مقامات پر درماندہ ہیںجن کو اس مہنگائی کے دور میں شدید مشکلات کاسامناکرناپڑرہاہے ۔ان کاکہناتھاکہ ہوائی جہاز کاکرایہ بیس ہزار سے بھی زائد ہے جو ادا کرکے ان مسافروں کیلئے کشمیر پہنچنا مشکل ہے اور حیرانگی کی بات ہے کہ گورنرانتظامیہ کی طرف سے انہیں منتقل کرنے کیلئے کوئی بھی اقدام نہیں کیاگیا اور نہ ہی کسی افسر نے ان کے پاس جاکر حال پوچھنے کی زحمت گواراکی ۔تاریگامی نے کہاکہ اگر انتظامیہ مسافروں کو منتقل کرنے کیلئے سنجیدہ نہیں تو کم از کم ان کیلئے خصوصی ہوائی جہاز کا انتظام کیاجائے تاکہ وہ خود کرایہ اد اکرکے سرینگر پہنچ سکیں ۔ ان کاکہناتھاکہ اس طرح کی صورتحال ماضی میں کبھی نہیں دیکھی گئی اور مسافروں کو ہمیشہ خصوصی سروس کے ذریعہ منتقل کیاجاتارہاہے ۔جموں سرینگر شاہراہ کے مسلسل بند رہنے کے نتیجے میں درماندہ مسافروں کی حالت زار پر تشویش کااظہار کرتے ہوئے سابق وزیرخزانہ سیدمحمدالطاف بخاری نے گورنر پرزوردیا کہ وہ فضائیہ کی مدد سے ہزاروں درماندہ مسافروں کواپنے منزل مقصود تک پہنچانے کاانتظام کریں۔ایک بیان میں انہوں نے کہا کہ سرکاری رپورٹوں کے مطابق سرینگرجموں شاہراہ کے مختلف مقامات پر ہزاروں مسافردرماندہ ہیں اوروہ جلدازجلد اپنے منزلوں پر پہنچنا چاہتے ہیں۔سابق وزیرخزانہ نے مطالبہ کیا کہ گورنر ذاتی طور مداخلت کرکے ان مسافروں جن میں بزرگ ،بچے،خواتین اور طالب علم بھی شامل ہیں،کوفضائیہ کی مدد سے ائرلفٹ کریں ۔ انہوں نے گورنر انتظامیہ پرزوردیا کہ وہ ایسی بحرانی صورتحال جو سرینگر جموں شاہراہ پر بھاری برف باری اور مختلف مقامات پر پسیاں گر آنے کی وجہ سے پیدا ہوئی ہے،سے نمٹنے کیلئے ایک جامع لائحہ عمل ترتیب دیں۔بخاری نے کہا کہ مجھے نہیں لگتا کہ حکام جو اس سڑک کی نگرانی اور رکھ رکھائوپر مامور ہیں ،اس کی جلد بحالی کرسکتے ہیں ۔خراب موسمی صورتحال اور بار بار پسیوں کے گرآنے اور چٹانیں کھسکنے سے اس سڑک پر بلاخلل گاڑیوں کی نقل وحمل میں مشکلات پیدا ہوئی ہیں ۔ایسی صورتحال میں انتظامیہ کو ایک جامع لائحہ عمل مرتب کرنا چاہیے تاکہ درماندہ مسافروں اور راشن کی کمی کے بحران سے نمٹا جائے۔انہوں نے کہا کہ جب تک گورنر انتظامیہ بھارتی فضائیہ کے بڑے طیاروں کی اضافی پروازوں کااہتمام کرتی ہے تب تک درماندہ مسافروں کیلئے مفت قیام وطعام اور طبی سہولیات کاانتظام کیاجانا چاہیے ۔انہوںنے حکام پر زوردیا کہ وہ شاہراہ کو قابل آمدورفت بنانے کیلئے کام میں تیزی لائیں ۔جموں میں درماندہ مسافروں کو فوری طور سرینگر ائر لفٹ کرنے کا مطالبہ کرتے ہوئے پیپلزڈیموکریٹک پارٹی کے نائب صدر عبدالرحمن ویری نے کہا کہ حکومت مسافروں کو اس وقت درپیش مشکلات سے آنکھیں چرانہیں سکتی ۔ایک بیان میں ویری نے گورنر انتظامیہ پرزوردیا کہ وہ فوری طور جموں میں درماندہ مسافروںجن میں بزرگ مریض بھی شامل ہیں، کی مدد کو آئیں ۔انہوں نے کہا کہ ان مسافروں کی جیبیں خالی ہوچکی ہیں اور وہ ہوٹلوں کا کرایہ ادا نہیں کرسکتے۔پی ڈی پی کے نائب صدر نے کہا کہ حکومت جموں میںدرماندہ مسافروں کی ہر ممکن مدداور ان کیلئے سرینگر تک مفت پروازوں کاانتظام کرناحکومت کا فرض منصبی ہے تاکہ وہ بحفاظت اپنے گھروں کو پہنچ سکیں۔انہوں نے کہا کہ2005میں جب پی ڈی پی برسراقتدار تھی تواس نے جموں میں درماندہ مسافروں کیلئے مفت پروازوں کااہتمام کرایااور اس کاخرچہ حکومت نے برداشت کیا۔اس وقت بھی ایسی ہی صورتحال پیدا ہوئی ہے اورحیرانی ہے کہ حکومت کو درماندہ مسافروں کی مدد کرنے میں کیا رکاوٹ ہے جو خراب موسمی صورتحال کی وجہ سے شاہراہ بند ہونے کاخمیازہ بھگت رہے ہیں ۔