انتخابی دھاندلیاں ،اخوان اورٹاسک فورس

این سی کے سیاہ کارنامے ،پی ڈی پی اپنے مؤقف پراٹل :خورشیدعالم

12 جنوری 2019 (00 : 01 AM)   
(      )

 سرینگر//پی ڈی پی کے لیڈراورضلع صدرسرینگرمحمدخورشیدعالم نے نیشنل کانفرنس پرانتخابی دھاندلیوں کے ذریعے ریاست کی سیاسی افراتفری کاماحول پیداکرنے کاالزام عائدکرتے ہوئے کہاکہ وعدوں سے منہ پھیرنا،اخوان اورٹاسک فورس ا سی جماعت کی دین ہے ۔ قانون سازکونسل کے ممبراورپی ڈی پی لیڈرنے نیشنل کانفرنس جنرل سیکرٹری کے حالیہ بیان پرسوال اُٹھاتے ہوئے کہاکہ اگراگربقول موصوف ہماری جماعت نے عوامی منڈیٹ کونظراندازکیاتوکس بناء پرنیشنل کانفرنس ہمیں غیرمشروط حمایت دینے کی پیشکش کی ۔انہوں نے کہاکہ این سی لیڈروں کویہ غلط فہمی ہے کہ ریاستی عوام کیساتھ تاریخی دھوکہ بازی کے باوجودیہ جماعت پھرعوام کوگمراہ کرنے میں کامیاب ہوجائیگی ۔محمدخورشیدعالم نے کہاکہ مخالفین کی کردارکشی ،گلی کوچوں میں فضول نعرے بازی ،مخالفین پربے بنیادالزامات عائدکرنااوراقتدارکیلئے کسی بھی حدتک جانانیشنل کانفرنس کاطرہ امتیازرہاہے ،اورتاریخ ایسے تلخ حقائق کی گواہ اورریاستی عوام اسکے شاہدہیں ۔انہوں نے کہاکہ کشمیری نوجوان جانتے ہیں کہ آج کی دردناک صورتحال کیلئے کون سی جماعت ذمہ دارہے۔پی ڈی پی لیڈرنے بیان میں یہ بھی کہاکہ نوجوان نسل کوبخوبی اسبات کی جانکاری ہے کہ این سی لیڈرشپ کے قول وفعل میں کس قدرتضادپایاجاتاہے ،۔انہوں نے نیشنل کانفرنس لیڈرشپ کواپنے گریباں میں جھانک کرنوشتہ دیوارپڑھنے کامشورہ دیتے ہوئے کہاکہ کشمیری کبھی یہ بھول نہیں سکتے کہ اس پارٹی اوراسکے لیڈروں نے کس قدرکانٹے بوئے جن کے زخم آج بھی اس قوم کوجھیلنے پڑتے ہیں ۔محمدخورشیدعالم نے کہاکہ این سی لیڈرشپ نے 1931سے ہی عوامی جذبات واحساسات کیساتھ کھلواڑکیا ۔ انہوں نے کہاکہ مہاراجہ ہری سنگھ سے قبل ہی این سی لیڈروں نے بھارت کیساتھ الحاق کومان لیاتھااوردستاویزالحاق پردستخط بھی کئے تھے کیونکہ اُنھیں کرسی چاہئے تھی ۔انہوں نے کہاکہ پھراس جماعت کے لیڈروں نے اس سادہ لوح قوم کورائے شماری کاسبزباغ دکھایااورپھراپنی اس جدوجہدکوسیاسی آوارہ گردی قراردیکر1975کاایکارڈصرف اسلئے کیاتاکہ اقتدارمل سکے ۔خورشیدعالم نے کہاکہ اقتدارحاصل کرناروزاول سے ہی این سی کااصل مدعا،مقصد اورمشن رہاہے ،اورآج بھی یہ جماعت کرسی کیلئے کچھ بھی کرگزرنے کوتیارہے۔انہوں نے کہاکہ1996میں اقتدارحاصل کرنے کے بعداین سی کی سرکارنے اخوان بنائی اورٹاسک فورس تشکیل دی ،اوریہ اسی جماعت کے بڑے کام ہیں ۔انہوں نے کہاکہ جہاں این سی لیڈرشپ نے کشمیری عوام کوصرف زخم دئیے ،وہیں پی ڈی پی صدرمحبوبہ مفتی نے اقتدارکی پرواہ کئے بغیربحیثیت وزیراعلیٰ رسانہ کٹھوعہ جیسے سانحات پرسخت اوراصولی اسٹینڈلیاجبکہ این سی سرکارنے شوپیان میں جواں سالہ لڑکیوں کی آبروریزی اورسفاکانہ قتل جیسے معاملے تک کودبادیا۔پی ڈی پی لیڈرمحمدخورشیدعالم نے کہاکہ این سی کی پوری تاریخ دغابازیوں ،غلط کاریوں اورمعصوم لوگوں کوزخم دینے سے بھری پڑی ہے ۔انہوں نے کہاکہ مژھل انکائونٹر،بومئی انکائونٹر،شوپیان سانحہ اور2010میں120معصوم کشمیری بچوں ونوجوانوں کوموت کی نیندسلادینے کیلئے کون ذمہ دارہے اورکس جماعت نے ریاست کی پوزیشن اورریاستی عوام کے منفردحیثیت ومفادات کیساتھ کھلواڑ کیاہے ۔خورشیدعالم نے کہاکہ پی ڈی پی قیادت نے کبھی اپنے اصولی موقف ،ریاست کی آئینی پوزیشن ،ریاستی عوام کی حیثیت ومفادات اورکشمیرسے جڑے سیاسی ،انتظامی اوراقتصادی مسائل کوکبھی نظراندازنہیں کیا۔
 

تازہ ترین