تازہ ترین

ریاست میں 16 کلسٹر قبائلی ماڈل دیہات کے قیام کو مرکزکی منظوری

12 اکتوبر 2018 (00 : 01 AM)   
(      )

ان گائوں میں درجہ فہرست اورقبائلی آبادی کیلئے تمام سہولیات میسر ہوں گی:سیکریٹری قبائلی امور
سرینگر //سیکرٹری سماجی بہبود ، کواپریٹوز و قبائلی امور ڈاکٹر فاروق احمد لون نے قبائلی امور محکمے کی ایک میٹنگ کے دوران ریاست میں اکلاوئیا ماڈل رہایشی سکول اور کلسٹر قبائلی ماڈل ولیجز کے قیام کا جائیزہ لیا ۔ میٹنگ میں ڈائریکٹر قبائلی امور محمد رفیع ، ڈائریکٹر فائنانس ڈاکٹر ایس کے سین اور کئی دیگر افسران بھی موجود تھے ۔ میٹنگ میں بتایا گیا کہ مرکزی حکومت نے سال 2018-19 کے دوران 16 نئے سی ٹی ایم وی قائم کرنے کو منظوری دی ہے جس سے ریاست کی ایس ٹی آبادی کو کافی فائدہ ملے گا ۔ اس موقعہ پر مزید بتایا گیا کہ مرکزی حکومت نے 2016-17 اور 2017-18 کے دوران ریاست کے 13 اضلاع کیلئے 17 سی ٹی ایم وی منظور کئے ۔ ان اضلاع میں پلوامہ ، شوپیاں ، اننت ناگ ، کپواڑہ ، لیہہ ، کرگل ، ڈوڈہ ، راجوری ، پونچھ ، ریاسی ، کٹھوعہ ، بڈگام اور کلگام شامل ہیں ۔ اس موقعہ پر مزید بتایا گیا کہ مرکزی سرکار نے ایس ٹی طلاب کو مفت تعلیمی اور قیام و طعام کی سہولیات بہم پہنچانے کیلئے اننت ناگ ، کلگام ، راجوری ، کرگل اور پونچھ میں پانچ ای ایم آر ایس منظور کئے ہیں اور اس طرح کے ہر ایک سکول میں 480 طلاب کی گنجائش ہو گی ۔ اس دوران بتایا گیا کہ ای ایم آر ایس کلگام اور اننت ناگ تکمیل کے آخری مرحلے میں ہیں جبکہ ای ایم آر ایس راجوری ، کرگل اور پونچھ کو مقررہ مدت کے اندر مکمل کیا جائے گا ۔ کلسٹر ٹرائیبل ماڈل ولیجز کے قیام کے حوالے سے جانکاری دی گئی کہ ان ولیجز میں ایس ٹی آبادی کیلئے تعلیم ، صحت ، ہنر مندی ، باغبانی ، زراعت ، سیاحت ، آر ڈی ڈی ، پی ڈبلیو ڈی ، پی ڈی ڈی اور پی ایچ ای کی سہولیات دستیاب ہوں گی ۔ سیکرٹری موصوف نے متعلقہ افسروں کو ہدایت دی کہ وہ تعمیرات کے معیار کی طرف بھر پور توجہ دیں ۔ انہوں نے التوا میں پڑے کاموں کو جلد از جلد مکمل کرنے کی ضرورت پر زور دیا ۔