تازہ ترین

گورنر کی صدارت میں سیکورٹی جائزہ میٹنگ

حفاظتی صورتحال، انتخابات ،جنگجومخالف آپریشن اور دیگر امور پر تبادلہ خیال

7 اکتوبر 2018 (00 : 01 AM)   
(      )

نیوز ڈیسک
سرینگر//ریاستی گورنر ستیہ پال ملک کی صدارت میں راج بھون سرینگر میں سیکورٹی جائزہ میٹنگ منعقد ہوئی ۔ میٹنگ میں 8اکتوبر سے شروع ہونے والے بلدیاتی اور پنچایتی انتخابات ،جنگجو مخالف آپریشن اور دیگر سیکورٹی امورات پر تبادلہ خیال کیا گیا ۔ سیکورٹی جائزہ میٹنگ میں شمالی فوج کے کمانڈر لیفٹنٹ جنرل رنبیر سنگھ ،گورنر کے دونوں مشیر بی بی ویاس اور وجے کمار ،ریاستی چیف سیکریٹری بی وی آر سبھرامنیم ،ریاستی پولیس سربراہ دلباغ سنگھ ،15کور کے کمانڈر جنرل اے کے بھٹ ،پرنسپل سیکریٹری گورنر امنگ نرولہ ،پرنسپل سیکریٹری ہوم آر کے گوئل ،صوبائی کمشنر کشمیر بصیر خان ،اے ڈی جی پی لاء اینڈ آرڈر منیر خان ،آئی جی کشمیر ایس پی پانی ،آئی جی سی آر پی ایف روی دیپ سنگھ سہائی ،آئی جی سی آر پی ایف آپریشنز ذوالفقار حسن اور دیگر ریاستی ومرکزی خفیہ ایجنسیوں کے سربراہاں نے شرکت کی ۔سیکورٹی جائزہ میٹنگ میں جموں وکشمیر کی مجموعی صورتحال ،بلدیاتی انتخابات ،جنگجومخالف آپریشن ،دراندازی اور دیگر امورات پر تبادلہ خیال کیا گیا ۔میٹنگ میں 8اکتوبر سے شروع ہونے والے بلدیاتی انتخابات کے حوالے سے کئے گئے حفاطتی انتظامات کے بارے میں گور نر کو جانکاری دی گئی ۔میٹنگ سے خطاب کرتے ہوئے گورنر ستیہ پال ملک نے سیکورٹی ایجنسیز کو ہدایت دی کہ وہ امن وقانون کی صورتحال  برقرار رکھنے کیلئے زمینی صورتحال پر کڑی نگاہ رکھیں ۔انہوں نے کہا کہ وہ بلدیاتی انتخابات کو احسن طریقے سے انجام دینے کیلئے سیول انتظامیہ کے ساتھ قریبی تال میل بنائیں ۔انہوں نے گزشتہ کئی روز سے امن وقانون کی صورتحال میں رخنہ ڈالنے کی کوشش کے پس منظر میں زور دیا کہ سلامتی صورتحال برقرار رکھنے اور جن افراد کو سیکورٹی فراہم کی گئی ہے ،اُنکی سلامتی کو یقینی بنایا جائے جبکہ سیکورٹی تنصیبات کے اردگرد  چوکسی برتی جائے ۔انہوں نے کہا کہ ریاست میں قیام امن کو یقینی بنانے کیلئے سیکورٹی فورسز کی قر بانیاں نا قابل فراموش ہیں ۔انہوں نے کہا کہ ڈیوٹی کے دوران جاں بحق ہوئے پولیس اہلکاروں اور اُنکے کنبوں کی فلاح وبہبود ہماری ذمہ داری ہے ۔انہوں نے کہا کہ پولیس اہلکاروں اور اُنکے کنبوں کی شکایات کا ترجیحی بنیادوں پر ازالہ کیا جائے گا ۔