تازہ ترین

کپوارہ قصبے میںہر سو کوڑاکرکٹ کے ڈھیر

گندگی سے اُٹھنے والی عفونت نے لوگوں کا جینا محال کردیا

11 ستمبر 2018 (00 : 01 AM)   
(      )

اشرف چراغ
کپوارہ//قصبہ کپوارہ میں کو ڑا کر کٹ کو ٹھکانے لگانے میں میونسپل کمیٹی کپوراہ بری طرح ناکام ہوچکی ہے، جبکہ اس کو ڑا کرکٹ سے پیدا ہونے والی بدبو نے راہگیرو ں کے علاوہ آس پاس کی آبادی کاجینا محال کردیا ہے ۔ قصبہ کی سڑکوں پر کو ڑا کرکٹ کئی روز تک پڑا رہتا ہے جس کی وجہ سے مویشی اور کتے ان مقامات پر اپنا ڈھیرہ جما کر مزید گندگی پھیلاتے ہیں ۔ میونسپل کمیٹی کپوارہ آج تک قصبہ کو صاف و شفاف رکھنے میں ناکام ہو گئی ہے ۔لوگو ں کا کہنا ہے کہ انتظامیہ آج تک  اس کوڑا کرکٹ کو ٹھکانے لگانے کے لئے کسی خاص مقام کے انتخاب کر نے میں ناکام ہو چکی ہے جس کی وجہ سے سڑکو ں ،گلی کوچو ں اور دیگر مقامات پر کئی روز تک یہ کو ڑا کرکٹ جمع رہتا ہے ۔لوگو ں نے بتا یا کہ اسپتال سڑک ،درزی پورہ ،سوگام سڑک اور سلکوٹ انور آ باد سڑک پر جمع کو ڑا کرکٹ کئی کئی روز تک نہیں ہٹا یا جاتا ہے جس کے نتیجے میں لوگو ں کے لئے ان سڑکو ں پر چلنا وبال بن گیا ہے کیو نکہ گندگی سے اٹھنے والی بد بو سے لوگ سخت پریشان ہیں ۔لوگو ں کا کہنا ہے کہ قصبہ کے متعدد مقامات پر گندگی کے ڈھیر اس بات کا ثبوت ہے کہ قصبہ کو صاف رکھنے میں میونسپل ادارہ ناکام  ہے ۔مقامی لوگو ں کا یہ بھی کہنا ہے کہ کبھی کبھی قصبہ سے نکلنے والے کو ڑا کرکٹ کو یہا ں کے ندی نالو ں میں ڈال دیا جاتا ہے ا ورا سے آ بی ذخائر تباہ ہورہے ہیں۔قصبہ میں تجارت پیشہ افراد اور آس پاس کے رہائش پذیر لوگو ں نے بتا یا کہ قصبہ کی گلی کوچوں اور سڑکو ں پر کو ڑا کرکٹ جمع کرنے کے لئے کوڑے دان رکھے گئے تھے اور بعد میں ان سے گندگی کو نکال کر گاڑی کے ذریعے نکال کر ٹھکانے لگایا جا تا تھا لیکن عرصہ دراز سے ناہی وہ کوڑے دان ہی نظر آتے ہیں نہ ہی وہ گا ڑی ،جس میں اس کو ڑا کر کٹ کو جمع کیا جاتھا  ۔مقامی لوگو ں کاکہنا ہے کہ کئی سال قبل قصبہ کو خوبصور ت بنانے کے لئے ضلع انتظامیہ نے ایک مہم شروع کی تاہم بعد میں یہ مہم ماند پڑ گئی ۔اس دوران قصبہ میں پبلک پارک کے آ س پاس تجارت پیشہ افراد کا کہنا ہے کہ پبلک پارک کے نزدیک کئی پولٹری دکان قائم ہیں جس کی وجہ سے پبلک پارک نے ایک بد صورت شکل اختیار کی ہے ۔تجارت پیشہ لوگو ں کے ساتھ ساتھ باقی لوگو ں کا کہنا ہے کہ لوگ کسی کام کی وجہ سے کپوارہ میں تھک جانے کے بعد مذکورہ پبلک پارک میں آکر اپنی تھکاوٹ دور کرنے کی غرض سے آتے ہیں لیکن پبلک پارک کے آس پاس پولٹری دکانوں سے اٹھنے والی بد بو سے وہ وہاں جانے سے کتراتے ہیں اور صورت حال کا اندازہ اس بات سے لگایا جاسکتا ہے اب پبلک پارک کے ارد گرد بھی گندگی اور غلا ظت ہوتی ہے لیکن میو نسپل کمیٹی اس پارک کی افادیت کو بچانے میں بھی ناکام ہو چکی ہے ۔لوگو ں نے گور نر انتظامیہ سے مطالبہ کیا کہ وہ فوری طور کپوارہ قصبہ کو جاذب نظر بنانے کے لئے اقدامات اٹھائیں ۔اس حوالہ سے ایگزیکٹو آفیسرمیونسپل کمیٹی کپوارہ سے رابطہ کرنے کی کوشش کی تاہم ان سے رابطہ نہ ہو سکا ،تاہم میونسپل ذرائع نے کشمیر عظمیٰ کو بتا یا قصبہ میں نصب کوڑے دانوں سے جو جو گاڑی کو ڑا کرکٹ جمع کرتی ہے وہ جدید تیکنالوجی کی گاڑی ہیڈرولک اویل سسٹم کی ہے اور کچھ روز قبل اس کا کوئی حصہ خراب ہو گیا جو سرینگر سے لانا ہے اور یہی وجہ ہے کہ کئی روز سے قصبہ کے متعددمقامات پر کو ڑا کرکٹ کو ٹھکانے نہیں لگایا گیا ۔