تازہ ترین

حریت کارکن کی ہلاکت ایک بڑی سازش

صحرائی اور ملک کا بومئی سوپور میں تعزیتی مجلس سے خطاب

11 ستمبر 2018 (00 : 01 AM)   
(      )

سرینگر//تحریک حریت چیئرمین محمد اشرف صحڑائی اورلبریشن فرنٹ چیئرمین محمد یاسین ملک نے  نامعلوم اسلحہ برداروں کے ہاتھوں سوپور میںحریت پسند کی ہلاکت کوایک بڑی سازش قراردیتے ہوئے کہا کہ ایسے حربوں کامقصدکشمیریوں کی مبنی برحق جدوجہدکو کمزورکرناہے۔اس دوران دیگرکئی مزاحمتی لیڈراورکارکن سوموارکی صبح بومئی سوپورپہنچے جہاں انہوں نے سنیچرکونامعلوم افرادکے ہاتھوں جاں بحق کئے گئے ایک مزاحمتی کارکن حکیم الرحمان کے پسماندگان کے ساتھ یکجہتی کااظہارکیا۔تحریک حریت چیئرمین محمد اشرف صحرائی نے کہا کہ اہل حق ہر دور میں اہل باطل کے ساتھ نبرد آزما ہوتے ہیں۔ اسی طرح آج بھی حق پرستوں کے خلاف ہندوستان نے ظلم وجبر کا بازار گرم کر رکھا ہے۔ صحرائی بومئی سوپورمیں حاکم الرحمان سلطانی کی تعزیتی مجلس سے خطاب کررہے تھے۔ انہوں نے کہا کہ مظلومی کی حالت میں قتل کئے جانے والے زیادہ مرتبہ رکھتے ہیں اور حاکم الرحمان سلطانی ایک علمی گھرانے سے تعلق رکھتا تھابلکہ خود بھی ایک تعلیم یافتہ نوجوان تھا اور تحریک حریت کے ساتھ ایک متحرک کارکن کی طرح تحریک آزادی کی خاطر جدوجہد میں مصروف رہا۔ انہوں نے مزید کہا ’ یہی وجہ ہے کہ موصوف نے 2016 کی عوامی تحریک کے دوران سوپور میں انقلابی رول ادا کیا جس کی پاداش میں ان کو تقریباً ڈیڑھ سال کی قید کی سزا ہوئی ۔ صحرائی نے کہا کہ آج بھی حاکم الرحمان کی ہلاکت اُن نامعلوم ہاتھوں سے ہوئی جن کے ذریعے اس سے پہلے بھی بہت سارے اسلام اور آزادی پسند بزرگوں، نوجوانوں اور بچوں کو جاں بحق کیا گیا۔تحریک حریت چیئرمین کے مطابق آج تک نہ کسی ہلاکت کی تحقیق ہوئی اور نہ کبھی ہوگی کیونکہ جو لوگ قاتل ہیں وہی تحقیقات کی دہائی دیتے ہیں۔صحرائی نے کہا کہ بھارت اس وقت جموں کشمیر میں الیکشن کا ڈول بجاکر یہاں امن کا نعرہ دے رہا ہے لیکن ہمارے خون بہانے میںایک لمحے کو بھی نہیں رُکتا ہے۔انہوں نے کہا کہ یہاں کسی الیکشن سے امن قائم نہیں ہوگابلکہ امن قائم کرنے کیلئے صرف اور صرف یہاں کے لوگوں کو حق خودارادیت کا حق دینے سے ہی ہوگا۔صحرائی نے کہا’’ ہم قربانیاں دیتے ہیں لیکن بعد میں اُن ہی لوگوں کا ساتھ دیتے ہیں جو اس خون کے ذمہ دار ہیں‘‘۔انہوں نے کہا کہ پی ڈی پی، نیشنل کانفرنس، کانگریس، بی جے پی یا اور کوئی ہندنواز پارٹی ہو، یہ ہمارے نوجوانوں کے خون کی ذمہ دار ہیں۔ صحرائی نے کہا ’’ہماری ذمہ داری بنتی ہے کہ ہم اُن لوگوں کو پہچان لیں جن لوگوں کے ہاتھ ہمارے نوجوانوں کے خون سے رنگے ہوئے ہیں اور جو ہماری غلامی کی سیاہ رات کو مزید طویل کردینے کے ذمہ دار ہیں، ہمیں ہر حال میں ان سے دور رہنا چاہیے‘‘۔ انہوں نے کہا’’ ہم نے ماضی میں شیخ محمد عبداللہ کا ساتھ دیا لیکن بعد میں ایک مسلمان ہوتے ہوئے اس نے کفر کے ساتھ ہاتھ ملایا اور قوم کے ساتھ دھوکہ کرکے ہمیں غلام بنایا جس سے آزادی پانے کیلئے ہم نے آج تک بے مثال قربانیاں پیش کی ہیں اور کررہے ہیں‘‘۔لبریشن فرنٹ چیئرمین محمدیاسین ملک نے تعزیتی اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے عوام سے الیکشن کابائیکاٹ کرنے کی اپیل کی۔انہوں نے کہا کہ آئین ہندکے تحت ہونے والے انتخابات میں حصہ لینارواں جدوجہدکیلئے سم قاتل ہے ۔یاسین ملک نے سوگوارخاندان کے ساتھ ہمدردی کا اظہارکرتے ہوئے کہاکہ کشمیری عوام کے عزم واستقلال کوکمزورکرنے کیلئے کئی ہاتھ سرگرم ہیں ۔انہوں نے حکیم الرحمان کی ہلاکت کوایک سازش سے تعبیرکرتے ہوئے کہاکہ ایسی ہلاکتوں کامقصدکشمیری قوم کے اندرنفاق اورایک دوسرے کے تئیں شکوک وشبہات پیداکرناہے۔یاسین ملک نے مجوزہ پنچایتی وبلدیاتی انتخابات کے تناظرمیں کہاکہ لوگوں کوآئین ہندکے تحت ہونے والے ہرالیکشن عمل سے دوررہناچاہئے کیونکہ بھارت کشمیری عوام کی الیکشن میں شرکت کوبین الااقوامی سطح پرغلط اندازمیں پیش کرتاہے ۔انہوں نے کہاکہ بھلے لوگ بجلی ،پانی ،سڑک اوردوسرے روزمرہ مسائل کاسدباب کرانے کیلئے ووٹ ڈالیں لیکن بھارت عالمی برادری کویہ تاثردیتاہے کہ کشمیری آئین ہنداوربھارت کی بالادستی کوتسلیم کرتے ہیں ۔فرنٹ چیئرمین نے کہاکہ ہراُس عمل کابائیکاٹ کیاجاناچاہئے جس کے نتیجے میں رواں جدوجہدکمزورہوجائے ۔انہوں نے کہا’ ہم کم مظالم ڈھانے والی سیاسی جماعت کے حق میں اپناووٹ ڈالتے ہیں لیکن اس کاسب سے زیادہ فائدہ بھارت لیتاہے‘۔یاسین ملک نے لوگوں پرزوردیاکہ وہ الیکشن عمل سے دُوررہیں۔پیپلز لیگ کے قائمقام چیئرمین سید محمد شفیع نے نامعلوم مسلح افرادکے ہاتھوں قتل کی مذمت کرتے ہوئے کہاکہ جموں کشمیر میںاخوانی دور کو دہرانے کی سازش کی جارہی ہے جوکہ انتہائی قابل مذمت ہے۔حاجی محمدرمضان کی قیادت میں نذیر احمد شاہ، مشتاق احمد صوفی اور دیگر  لیگ اراکین پر مشتمل وفدنے بومئی سوپور جاکر غمزدہ خاندان سے اظہار یکجہتی کیا۔ ماس مونٹ نے ہلاکت کو ایک المناک سانحہ قرار دیا۔ماس مونٹ سربراہ فریدہ بہن جی اور چیئرمین مولوی بشیر عرفانی نے حاکم الرحمان کو  خراج عقیدت ادا کرتے ہوئے اہل خانہ کے ساتھ تعزیت کا اظہار کیا۔ انہوں نے کہا کہ حاکم الرحمان نے 2016 کی عوامی تحریک میں جو رول ادا کیا،وہ نا قابل فراموش ہے۔