قدغن کے باوجود جلوسِ عزا برآمد ہونگے: آغا حسن

10 ستمبر 2018 (00 : 01 AM)   
(      )

 سرینگر/انجمن شرعی شیعیان کے دیہہ ، زونل اور ضلع صدور و سیکریٹری صاحبان اور دیگر معزز اراکین و عاملین کا خصوصی محرم اجلاس صدر دفتر پر تنظیم کے سربراہ آغا سید حسن کی صدارت میں منعقد ہوا۔ اجلاس میں تنظیم کے اہتمام سے وادی کے اطراف و اکناف میں محرم الحرام کے دوران برآمد ہونے والے جلوس ہائے عزا اور مجالس حسینیؑ کے انتظامات کو تفصیلی مشاورت کے بعد حتمی شکل دی گئی۔ اراکین و عاملین نے اس عزم کا اعادہ کیا کہ وہ محرم تقریبات کے تسلی بخش اور پُرامن انعقاد کو یقینی بنانے کیلئے اپنی تمام تر صلاحتیوں کو بروئے کار لاکر تنظیمی ذمہ داریوں کا بھر پور ثبوت پیش کریں گے۔ اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے آغا سید حسن نے ماہ محرم الحرام کو دین وشریعت کے تحفظ کیلئے احساس ذمہ داریوں کی تجدید کا مہینہ قرار دیتے ہوئے اراکین و عاملین سے تاکید کی کہ وہ محرم تقریبات کے دوران ہر سطح پر حدود شریعت اور احترام انسانیت کو ترجیح دیکر شہدائے کربلا کو حقیقی معنوں میں خراج نذر کریں۔ انہوںنے کہا کہ محرم الحرام کے دوران آپسی اتحاد و اخوت کو بنائے رکھنے کیلئے وادی کی تمام دینی تنظیموں نے حسب سالہاے گزشتہ اپنی خدمات میسر رکھی ہوئی ہیں جو ہمارے لئے انتہائی حوصلہ افزا ہے۔آغا حسن نے لالچوک سرینگر سے برآمد ہونے والے تاریخی جلوس عزا پر مسلسل قدغن کو مداخلت فی الدین کی سیاہ مثال قرار دیتے ہوئے ریاستی انتظامیہ سے مطالبہ کیا کہ وہ بلا تاخیر ان جلوسوں پر لگی پابندیوں کو ختم کرنے کا اعلان کرے۔ آغا حسن نے کہا کہ حکومتی پابندیوں کو نظر انداز کرتے ہوئے 8 اور 10 محرم کے تاریخی جلوس حسب سابقہ برآمد کئے جائیں گے۔
 

تازہ ترین