تازہ ترین

کٹھوعہ کے ہوسٹل سے 20کمسن بچے و بچیاں بازیاب

دست درازی کے الزامات میں پادری گرفتار

9 ستمبر 2018 (00 : 01 AM)   
(      )

حافظ قریشی
 کٹھوعہ // ہندوستان کے مختلف کونوں میں بچوں کیلئے چلائے جا رہے یتیم خانوں میں کمسن لڑکوں اور لڑکیوں کے جسمانی استحصال کی خبروں کے بیچ اب ضلع کٹھوعہ کے ’پارلی بنڈ‘ میں انسانیت کو شرمسار کر دینے والا معاملہ سامنے آیا ہے ۔ قصبہ کے پارلی بنڈ علاقہ میں گرجا گھر کے نام پر بنائے گئے رہائشی ہوسٹل میں کم سن بچوںاور بچیوں کے ساتھ دست درازی کے الزامات عائد کئے گئے ہیں۔ جمعہ کی شام قریب 5 بجے ضلع ترقیاتی کمشنر کٹھوعہ کے ہمراہ کٹھوعہ پولیس نے اس عمارت پر چھاپہ مارا اور لگ بھگ دو گھنٹوں تک تلاشی مہم اور بچوں سے پوچھ تاچھ کے بعد اس ہوسٹل کے منتظم ’انٹنی تھومس‘ کو حراست میں لے لیا گیا ہے ۔ اس مہم کے دوران پولیس نے 7 سے 16 برس کی 8 لڑکیوں کو اور 12 لڑکوں کو اس آشرام سے ناری نیکتن منتقل کیا ہے۔ اس دوران بچوں نے ہوسٹل کو چلا رہے منتظم پر دست درازی کا الزام لگایا، یہ بچے جموں کشمیر کے علاوہ  ہماچل اور پنجاب کے بتائے جاتے ہیں۔ ضلع ترقیاتی کمشنر روہت کجھوریہ نے بتایا کہ معاملہ سامنے آنے کے بعد کٹھوعہ پولیس کی ایک ٹیم جانچ کر رہی ہے اور جو بھی اس میں قصور وار پایا جائے گا اس کے خلاف سخت قانونی کارروائی عمل میں لائی جائے گی۔ پولیس ذرائع نے بتایاہے کہ پادری کیخلافPOSCOایکٹ کے تحت معاملہ درج کیاہے۔