تازہ ترین

کٹھوعہ عصمت دری و قتل معاملہ : 7ملزمان گورداس پور جیل منتقل ،گواہوں کی جرح جاری

12 جولائی 2018 (00 : 01 AM)   
(      )

اروند شرما
جموں //سپریم کورٹ کی حالیہ ہدایات پر عمل درآمد کرتے ہوئے حکام نے کٹھوعہ عصمت دری و قتل معاملہ کے 7ملزمان کو کٹھوعہ ضلع جیل سے پنجاب کی گورداس پور جیل منتقل کر دیا۔ ضلع و سیشن جج پٹھانکوٹ نے ایس ایس پی پٹھانکوٹ اور ایس ایس پی گورداس پور کو آج عدالت میں طلب کر کے ہدایت دی کہ آج سے ملزمان کی سیکورٹی آپ کے ذمہ ہے ۔ فاضل جج نے ایک تحریری حکمنامہ جاری کیا جس میں کہا گیا ہے کہ ’سپریم کورٹ کی ہدایت پر میں اس معاملہ کے ملزمان کو پنجاب پولیس کے سپرد کر رہا ہوں، آج کے بعد ان کی حفاظت اور سیکورٹی پنجاب پولیس کے ذمہ ہوگی۔ اس دوران وکیل صفائی اے کے ساہنی نے احاطہ عدالت میں میڈیا کو بتایا کہ بدھ کے روز معاملہ کے ساتویں گواہ، مقامی پٹواری سے جرح کی گئی جس نے اس دوران بتایا کہ دیو ستھان کے ملزم سانجھی رام سمیت 6مالک ہیں۔ استغاثہ کے مطابق متاثرہ بچی کو اسی دیوستھان میں یرغمال بنا کر رکھا گیا تھا۔ گزشتہ روز مقامی نائب تحصیلدار نے بھی عدالت کو یہی بتایا تھا کہ دیوستھان سانجھی رام سمیت 6افراد کی ملیت میں ہے ۔ پٹواری نے بتایا کہ دیوستھان کی تین چابیاں ہیں جو مختلف افراد کے پاس ہوتی ہیں۔ اس دوران آٹھویں گواہی ایس ایچ او ہیرا نگر کی ہے اس پر جرح شروع ہو گئی جو جمعرات کو بھی جاری رہے گی۔